• Sat. Oct 23rd, 2021

اہلیان وادی کو N1H1اور کووڈ 19جیسے دوہرے وائرس کا سامنا

Byadmin

Oct 13, 2021

وادی میں فلو ویکسین دستیاب نہ ہونے سے لوگوں میں تشویش کی لہر
سرینگر/ 13 اکتوبر /سی این آئی//ایک طرف وادی میں لوگوںکو دوہرے فلو ایک تو کوروناوائرس اور دوسرا N1H1کا سامنا ہے دوسری طرف وادی میں فلو ویکسین کی قلت پیدا ہوگئی ہے اور اگرکہیں پر فلو ویکسین دستیاب ہے تو وہ قریب دو ہزار روپے تک فروخت کیا جارہا ہے ۔ ادھر ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ مختلف جگہوں پر فلو ویکسین کو بلیک میںمہنگے داموں فروخت کیا جارہا ہے ۔ادھر نگوا سکمز اور جی آر بیگ میموریل ٹرسٹ نے سکمز صورہ اور دیگر اداروں میں فلو ویکسین دستیاب رکھنے کامطالبہ کیا ہے ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق وادی کشمیر میں موسم تبدیل ہونے کے ساتھ ہی N1H1وائرس زور پکٹرتا ہے جو کافی مہلک ثابت ہورہا ہے اس بیچ فلوویکسین سے ہی N1H1وائرس سے محفوظ رہا جاسکتا ہے ۔ رواں برس اہلیان وادی کو ایک تو این ون ایچ ون کا خطر ہ ہے دوسرا کوروناوائرس کا بھی خطرہ ہے اور اس طرح سے دوہرے وائرس سے لوگوں کا مقابلہ ہے ۔ اس بیچ اس بات کا انکشاف ہوا ہے کہ فلو سیزن شروع ہونے کے ساتھ ہی فلو ویکسین کی قلت پیدا ہوئی ہے ۔ سرکارکی طرف سے صورہ سکمز اور دیگر طبی مراکز پر فلو ویکسین عام لوگوں کےلئے دستیاب ہوا کرتا تھا جہاں سے لوگوں کو رعایتی داموں پر ویکسین دستیاب رکھا جاتا تاہم امسال ابھی تک کسی بھی جگہ فلو ویکسین ریایتی دام پر دستیاب نہیں ہے ۔ صورہ سکمز کی جانب سے ہر برس ہزاروں افراد کو ویکسین فراہم کی جاتی تھی تاہم امسال ابھی تک یہ نہ صورہ میں ہی ویکسین دستیاب ہے اور ناہی کسی دوسری فارمسٹس میںجہاں پر لوگوں کو کم دام میں ویکسین ملتا تھا دستیاب ہے ۔ اس بیچ معلوم ہواہے کہ فلو ویکسین بازاروں میں 1750سے قریب 2000روپے تک فروخت کیا جارہا ہے جبکہ کئی جگہوں سے شکایت ملی ہے کہ فلوویکسین کو بلیک میں مہنگے داموں فروخت کیا جارہا ہے ۔ اس ضمن میں عوامی حلقوں نے لیفٹیننٹ گورنر اور چیف سیکریٹری جموں کشمیر سے اپیل کی ہے کہ فلوویکسین کو دستیاب رکھنے کےلئے اقدامات اُٹھائیں ۔ ماہرین کے مطابق اسی ماہ فلو ویکسین دینا زیادہ بہتر رہتا ہے اور اگر اس مہینے میں ویکیسن دستیاب نہ ہوا تو اس کا اثر کم ہوجاتا ہے ۔ دریں اثناءکئی سماجی انجمنوں جن میں نگوا سکمز اور جی آر بیگ میموریل ٹرسٹ بھی شامل ہے نے مطالبہ کیا ہے کہ صورہ سکمز میں فلو ویکسین کو فوری طور پر دستیاب رکھا جائے تاکہ لوگوں کو راحت ملے ۔ انہوںنے کہا ہے کہ ویکسین کی زیادہ قیمت سے عام لوگ فلو ویکسین لینے سے گریز کرتے ہیں اس لئے سرکار کو چاہئے کہ اس کو رعایتی داموں پر دستیاب رکھیں ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *